102

راولپنڈی پولیس تبدیلی کی جناب گامزن

راولپنڈی

سرپرائز وزٹ کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئے،ایس پی صدر رائےمظہراقبال نے تھانہ کلر سیداں اور کہوٹہ کا وزٹ کیا،

تھانہ میں رہ کر سائلین اوردرخواست گزار سے براہ راست ملاقات کی۔ تھانہ جات کی حوالات میں بند ملزمان سے پوچھ گوچھ۔

تفصیلات کے مطابق ایس پی صدر ڈویژن رائے مظہر اقبال نے صدر ڈویژن کے تھانہ جات کے سرپرائز وزٹ کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئےامروز تھانہ کلرسیداں اور تھانہ کہوٹہ کا وزٹ کیا۔

وزٹ کے دوران انہوں نے تھانہ جات میں رہ کر براہ راست سائلین اور درخواست گزاروں سے ملاقات کی ۔

سائلین کے مسائل میرٹ اور ترجیح بنیادوں پر حل کرنے اور فوری رسپانس کے احکامات صادر فرمائے ۔

جس کے بعد انہوں نے تھانہ جات کی حوالات میں بند زیر حراست ملزمان سے ملاقات کی۔پولیس ریکارڈ میں باقاعدہ طور پر بند ملزمان کی انٹری کو چیک کیا گیا۔

تھانہ جات کی بلڈنگ ،فرنٹ ڈیسک روم، کوت،ریکریشن روم، کمرہ ڈیوٹی آفیسراور تھانہ کے ریکارڈ کوچیک کیا گیا۔

صفائی کے بہتر انتظامات اور گڈ سپروئزان پر دونوں SHO,s اور محرران اور شاباش دی گئی ۔

اس موقع پر ان کا کہنا تھا کہ تھانہ میں آنے والے درخواست گزاروں/ سائلین کی فوری دادرسی کی جائے۔ خصوصی پر خواتین، بچوں اورہیومن رائٹس کے واقعات کی صورت میں فوری ایکشن لیا جائے ۔

تمام درخواستوں پر محکمانہ کاروائی کی باقاعدگی سے مانیٹرنگ کی جا رہی ہے تاکہ لوگوں کو ریلیف کی فراہمی میں تاخیر نہ ہو۔

امن و امان کا قیام،معاشرتی برائیوں،جرائم کا خاتمہ،منشیات کا خاتمہ پولیس کی اولین ترجیح ہے۔

کسی بھی مظلوم کے ساتھ ناانصافی ہرگز برداشت نہیں جائے گئی۔

کسی بھی شخص کو غیر قانونی طور پر حراست میں نہیں رکھا جاسکتا۔اگر کسی پولیس آفسیر یا اہلکار کے زیر نگرانی عقوبت خانے یا نجی ٹارچر سیل کی اطلاع موصول ہوئی۔تو ایسے شخص کی محکمہ پولیس میں کوئی جگہ نہ ہے۔

آئی جی صاحب کے احکامات کے مطابق تمام ایس ایچ اوز 4 تا 6 بجے تک پبلک ڈیلنگ کے لیے اپنے آفس میں موجود رہیں گے ۔

تھانہ جات میں لگائے گئے CCTVکیمرہ جات کی مانیٹرنگ 24/7 جاری ہے۔تمام کیمرہ جات فعال ہونے چاہیے۔

ایسے پولیس افسران و ملازمان جن کے جرائم پیشہ عناصر سے روابط ہیں۔ ان کے خلاف محکمانہ کاروائی عمل میں لا کر ڈسمس فراہم سروس کیا جائے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں