127

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے قوم سے معافی مانگ لی

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے قوم سے معافی مانگ لی

ایل این جی کیس میں گرفتار سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے جسمانی ریمانڈ میں مزید 14 روز کی توسیع کر دی گئی۔ جسمانی ریمانڈ کی مدت ختم ہونے پر نیب حکام کی جانب سے سابق وزیراعظم کو احتساب عدالت میں پیش کیا گیا۔

احتساب عدالت نے نیب کی استدعا پر شاہد خاقان عباسی کے ریمانڈ میں مزید 14 روز کی توسیع کر دی اور 26 ستمبر کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دیا۔

اس موقع پر میڈیا کے نمائندوں سے بات کرتے ہوئے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ مجھ پر الزم لگایا گیا کہ میں وزارت خارجہ کی گاڑی استعمال کرتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ ملک کا وزیراعظم تھا، بتا دیتے تو آفس پہنچنے کے لیے تانگہ یا آن لائن ٹیکسی کرا لیتا۔

انہوں نے کہا کہ ایک سال سے نیب تفتیش کر رہا ہے، 55 دن سے ریمانڈ بھی چل رہا ہے لیکن ابھی تک کیس سمجھ نہیں آیا۔

انہوں نے کہا کہ چیئرمین نیب کی تقرری پر قوم سے معافی مانگتا ہوں، چیئرمین نیب کا نام پیپلز پارٹی کی طرف سے آیا تھا، اتفاق رائے سے تقرری کا فیصلہ کیا۔

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی ایل این جی کیس میں گرفتار ہیں اور نیب ان سے تفتیش کر رہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں