114

وزیراعظم کے خلاف اسلام آباد تھانے میں توہین صحابہ پر درخواست دائر

وزیراعظم عمران خان کی جانب سے قوم سے خطاب میں غزوہ بدر اور غزوہ احد کے متعلق توہین آمیز کلمات کا استعمال۔ ۔ ۔

وزیراعظم عمران خان کے خلاف توہین صحابہ کا مقدمہ درج کرنے کے لئے درخواست تھانہ آئی نائن اسلام آباد میں جمع۔ ۔ ۔

درخواست سینئر وکیل سپریم کورٹ فاؤنڈیشن طارق اسد ایڈووکیٹ نے جمع کروائی۔ ۔ ۔

درخواست ایس ایچ او تھانہ آئی نائن محمد مصطفی نے وصول کی۔ ۔ ۔

درخواست میں وزیراعظم عمران خان کے خلاف پاکستان پینل کوڈ اور انسداد دہشتگردی کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کرکے گرفتار کرنے کی استدعا۔ ۔ ۔

وزیراعظم نے قوم سے خطاب میں جان بوجھ کر بدنیتی کی بنیاد پر کروڑوں مسلمانوں کی دل آزاری کرنے اور ملک میں انتشار پیداء کرنے کے لئے ایسے الفاظ کہے جو اصحاب رسول صلی اللہ علیہ وسلم کی واضح توہین ہے، ، ،

وزیراعظم نے اپنے خطاب میں توہین آمیز الفاظ کہہ کر معاذاللہ صحابہ کرام کو بزدل،لٹیرے اور حضور صلی اللہ علیہ وسلم کا نافرمان ثابت کرنے کی کوشش کی، ، ،

اصحاب رسول صلی اللہ علیہ وسلم کو بزدل،لٹیرا اور حضور صلی اللہ علیہ وسلم کا نافرمان کہنا بدترین گستاخی اور توہین ہے، ، ،

وزیراعظم کی جانب سے صحابہ کرام کی گستاخی پر درخواست گزار سمیت پاکستان کے کروڑوں مسلمانوں کے مذہبی جذبات شدید مجروح ہوئے، ، ،

وزیراعظم عمران خان کے اس گستاخانہ اور توہین آمیز اقدام کے نتیجے میں ملک بھر کے کروڑوں شہریوں میں شدید اشتعال اور غم و غصہ پیداء ہوا، ، ،

عمران خان نے دانستہ طور پر توہین اصحاب رسول صلی اللہ علیہ وسلم کا ارتکاب کرکے ملک میں اشتعال پیداء کیا، ، ،

پاکستان کے کروڑوں شہری عمران خان کی جانب سے اصحاب رسول صلی اللہ علیہ وسلم کی گستاخی پر سراپا احتجاج ہیں، ، ،

وزیراعظم عمران خان نے دانستہ طور پر توہین صحابہ کا ارتکاب کرکے ملک میں امن و امان کا شدید مسئلہ پیداء کیا، ، ،

وزیراعظم عمران خان نے توہین آمیز الفاظ کہہ کر ناقابل تلافی اور ناقابل معافی جرم کا ارتکاب کیا>درخواست میں موقف۔

وزیراعظم عمران خان کی جانب سے توہین صحابہ کا ارتکاب کئے جانے پر ان کے خلاف پاکستان پینل کوڈ اور انسداد دہشتگردی ایکٹ کے تحت فوری طور پر مقدمہ درج کرکے قانون کے مطابق کاروائی کرتے ہوئے ان کی گرفتاری عمل میں لائی جائے>درخواست میں استدعا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں